18 January, 2019 06:23


image.png

https://www.youtube.com/watch?v=aoYiUSdoXB0

http://www.zemtv.com/2019/01/17/nadeem-malik-live-17th-january-2019/

NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

17-01-2019

TOPIC- PAKISTAN POLITICS

GUESTS- ALI ZAIDI, QAMAR ZAMAN KAIRA, JAVED ABBASI, SALMAN AKRAM RAJA, CH NASIR

ALI ZAIDI OF PTI said that Asif Khosa has complete command on the law but his personality will be reflected by his conducts as the CJ.

He said that what happened with the girls in Rawalpindi we all are responsible for it that what we have done with our nation. He said that he will make no announcement but his action will speak for his response on it.

QAMAR ZAMAN KAIRA OF PTI said that judicial activism is good but it should not undermine the institutions. He said that the activism created by Iftikhar Ch and Saqib Nisar needs to be pacified. He said that hopefully Asif Saeed Khosa will speak through his decisions.

He said that we do not learn from our past. He said that there are five governments in Pakistan four provincial and one federal if one will be sacked four other will automatically fall down. He said that we are playing on corruption card five or six governments have been sacked on this card.

He said that the SC cannot do the legislation but can provide guiding lines.

He said that we do not have facilities to deal emergency like rest of the world.

JAVED ABBASI OF PML-N said that Asif Saeed Khosa today clarified his way forward as the new CJ of Pakistan. He said that cases are being adjudicated for years but are not decided. He said that the judiciary needs to bring reforms in their system to provide swift justice to the people. He said that the current government does not have capability to run the economy of the country.

He said that the article of the constitution 184-3 is widely misused in Pakistan.

He said that there should be a panel of at least five judges to take the suo moto notice.

He said that if we cannot handle a small scale incident like in Rawalpindi how we can deal will a calamity.

SALMAN AKRAM RAJA LAW EXPERT said that what Asif Saeed Khosa said today is good news. He said that the legal matters should not be dependent on the CJ only. He said that there should be a panel of four judges to decide to take the suo moto notice.

CH NASIR THE UNCLE OF THE DEAD GIRLS IN RAWALPINDI

He said that about 12/30 PM he was informed that his house is on fire. He said that when he reached home the fire brigade vehicle also pulled in. He said that in five minutes fire brigade was out of water. He said that the rescue staff had no more water, ladders or the helmets and gloves. He said that the second ambulance after the first one came after forty five minutes.

He said that the girls were transported to the Holy Family Hospital in private vehicles. He said that the hospital staff told them to take the girls to civil hospital. He said that the girls transported to the civil hospital in private ambulances.

He said that the MNA Sheikh Rashid came to his house to offer condolences but no government representative has come as yet. He said that he will ask to the new CJ to take first notice of this incident.

http://nadeemmalik.wordpress.com/

Advertisements

17 January, 2019 16:10


NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

17-01-2019

جسٹس آصف کھوسہ کی قانون پر بڑی گرفت ہے لیکن ان کی شخصیت کس طرح کی ہے یہ ان کے دور کے دوران پتہ چلے گا۔علی زیدی کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

جو کچھ بچیوں کے ساتھ سانحہ ہوا ہے اس کے ہم سب زمہ دار ہیں ہم نے اپنی قوم کے ساتھ یہی کچھ کیا ہے۔

پنڈی کے واقع پر میں کوئی بات نہیں کروں گا لیکن جو کروں گا وہ کل سب کو پتہ چل جائے گا۔

پیپلز پارٹی کے قمر زمان کائرہ نے کہا

جیوڈیشل ایکٹو ازم اچھی بات ہے لیکن اس سے ادارے انڈر مائین نہیں ہونے چاہئییں۔

افتخار چوہدری اور ثاقب نثار نے جو جیوڈیشری کا جو ماحول بنایا ہے اسے ٹھنڈا کرنے کی ضرورت ہے۔

جسٹس کھوسہ امید ہے کہ اپنے فیصلوں سے بولیں گے۔

ہم اپنے ماضی نہیں سیکھتے لیڈر وہ ہوتا ہے جو مستقبل کو دیکھے۔

پاکستان میں پانچ حکومتیں ہیں ایک جائے گی تو باقی چار بھی چلی جایں گی۔

ہمارے ہاں ایمرجنسی سہولتیں باقی دنیا کی طرح نہیں ہیں۔

حکومت کرپشن کارڈ پر کھیل رہی ہے پچھلی پانچ چھہ حکومتیں صرف اسی کارڈ کے زریعے گرائی گئی ہیں۔

سپریم کورٹ قانون سازی نہیں کر سکتی لیکن پارلیمنٹ کی رہنمائی کر سکتی ہے۔

مسلم لیگ ن کے جاوید عباسی نے کہا کہ

آصف سعید نے آج اپنے بیان سے اپنی راہ متعین کی ہے۔

لوگوں کے مقدامت سالوں سے چل رہے ہیں ان کے فیصلے نہیں ہوتے۔

امید کرتے ہیں کہ جیوڈیشری اپنے نظام میں اصلاحات لائے گی۔

پندڈی کا ایک گھر کا واقع ہوا ہم کچھ نہیں کر سکے اگر کوئی بڑی مصیبت ہو گئی تو ہم کیا کریں گے۔

ایبٹ آباد میں لوگ حکومت کے خلاف سڑکوں پر مظاہرے کر رہے ہیں ایل این جی کی شپمنٹ نہ لینے کی وجہ گیس نہیں مل رہی۔

حکومت کی معاشی ٹیم کے بس کی بات نہیں ہے کہ اس ملک کو چلا سکے۔

سب سے زیادہ غلط استعمال ون ایٹی فور تھری کا ہوا ہے۔

سوو موٹو نوٹس لینے کے لئیے پانچ ججوں کا ایک پینل ہونا چاہئیے اور اس بات پر پارلیمنٹ میں بحث ہونی چاہئیے۔

قانون کے ماہر سلمان اکرم راجہ نے کہا کہ

آصف کھوسہ نے آج جو بات کی ہے یہ بہت خوش آئین ہے۔

ایسا نہیں ہونا چاہئیے کہ قانونی معاملات کا انحصار صرف ایک چیف جسٹس پر ہو۔

چار جج ہونے چاہئییں جو فیصلہ کریں کہ کس بات پر سوو موٹو نوٹس لینا ہے کس پر نہیں۔

پنڈی میں حادثے میں مرنے والی پانچ بچیوں کے عزیز چوہدری ناصر نے کہا کہ

ساڑھے بارہ بجے مجھے اطلاع ملی کہ گھر میں آگ لگ گئی ہے میں فوراْ گھر پہنچا۔

میں گھر پہنچا تو فائر بریگیڈ کی گاڑی بھی آ گئی لیکن پانچ منٹ کے بعد اس کا پانی ختم ہو گیا۔

نہ عملے کے پاس اور پانی تھا نہ سیڑھی تھی اور نہ کوئی اور چیز تھی۔

ہم پرائیویٹ گاڑیوں میں بچیوں کو ہسپتال لے کر گئے انہوں نے کہا بر وقت آ جاتیں تو بچ سکتی تھیں۔

ہولی فیملی ہسپتال والوں نے کہا انہیں سول ہسپتال لے جایں ہم پرائیویٹ ایمبولینسوں میں لے کر گئے۔

پہلی ایمبولینس کے بعد دوسری پینتالیس منٹ کے بعد آئی۔

شیخ راشد صاحب میرے پاس آئے لیکن حکومت کا کوئی زمہ دار نہیں آیا۔

میں چیف جسٹس سے درخواست کرتا ہوں کہ سب سے پہلا نوٹس ہمارے کیس کا لیں۔

http://nadeemmalik.wordpress.com/

17 January, 2019 06:24


image.png

https://www.youtube.com/watch?v=doMNvgd6fcI

http://www.zemtv.com/2019/01/16/nadeem-malik-live-16th-january-2019/

http://siasatkorner.com/threads/nadeem-malik-live-%E2%80%93-16th-january-2019.410550/

NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

16-01-2019

TOPIC- PAKISTAN POLITICS

GUESTS- AFTAB SIDDIQI, SHEIKH ROHAIL ASGHAR, ALI MOHAMMAD KHAN, MURTAZA WAHAB

AFTAB SIDDIQI OF PTI said that there was good meeting with Asad Umer of PTI members and no remonstration was done by them. He said that inflation was much higher in the first six months of PML-N government as compare to PTI but media is not doing the actual reporting. He said that the members asked Asad Umer for the development funds for their constituencies.

He said that the federal government wants to do huge development work in Karachi but needs cooperation of the Sindh government.

SHEIKH ROHAIL ASGHAR OF PML-N said that as long the government will not get rid of the enmity against the opposition it cannot move forward. He said that the federal government has no authority to offer NRO to the opposition. He said that the politicians should sit together to fix the system. He said that the PTI government should start accountability from Aleem Khan. He said that PTI government destroyed accountability system in KPK.

ALI MOHAMMAD KHAN OF PTI said that on one hand opposition says that PTI government is making cases against them but on other hand they are saying that they have no authority to offer NRO. He said that Imran Khan reiterated today that if NAB would have been under his authority at least fifty people were going to be put in jail by now. He said that it proves that NAB is not under his control. He said that the opposition does not say anything in the defense on the allegations of corruption against them. He said that the opposition only says that if the cases of corruption have been filed against them why not against PTI.

He said that it was the mistake of PTI government that they did not run the accountability system in KPK the way it should have been. He said that eversince PTI government is formed the corruption at the level of the PM and ministers has been abolished.

He said that not even one good hospital has been built in the city like Islamabad during the governments of PML-N and PPPP.

He said that it takes time to fix the economy it cannot be done overnightly.

MURTAZA WAHAB OF PPPP said that the constitution is active in its true sense the government cannot offer any NRO. He said that the allegations labeled against the PPPP leaders were not proven in the trial courts. He said that Dr Asim was accused for the corruption of 462 billion rupees but was not proven in the court.

He said that there is no accountability institution in America and Britain they have self accountability system in every ministry.

http://nadeemmalik.wordpress.com/

16 January, 2019 16:24


NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

16-01-2019

پی ٹی آئی کی میٹنگ میں کوئی گلہ گزاری نہیں ہوئی اسد عمر کے ساتھ بہت اچھی میٹنگ ہوئی۔ آفتاب صدیقی کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

مسلم لیگ ن کے ابتدائی دور میں ہم سے بہت زیادہ مہنگائی ہوئی تھی میڈیا ہمارے متعلق ٹھیک رپورٹنگ نہیں کر رہا۔

ارکان نے اپنے حلقوں کے لئیے ترقیاتی فنڈز مانگے۔

وفاقی حکومت کراچی میں کافی کام کرنا چاہتی ہے لیکن اس کے لئیے سندھ حکومت کی مدد کی ضرورت ہے۔

مسلم لیگ ن کے شیخ روحیل اصغر نے کہا کہ

جب تک حکومت اپنے دل سے اپوزیشن کے خلاف نفرت ختم نہیں کرے گی تو یہ آگے نہیں بڑھ سکتی۔

حکومت ہمیں این آر او دے ہی نہیں سکتی۔

سیاست دانوں کو چاہئیے کہ آپس میں بیٹھ کر سسٹم کو ٹھیک کر لیں۔

حکومت احتساب کا کام سب سے پہلے علیم خان سے شروع کرے۔

پی ٹی آئی نے کے پی کے میں احتساب کے عمل کو تباہ کر دیا۔

پی ٹی آئی کے علی محمد خان نے کہا کہ

ایک طرف اپوزیشن کہتی ہے کہ ان کے خلاف جان بوجھ کر مقدمات بنائے جا رہے ہیں دوسری طرف کہتے ہیں کہ حکومت ہمیں این آر او دے ہی نہیں سکتی۔

عمران خان نے آج بھی کہا ہے کہ اگر نیب کا ادارہ ان کے نیچے ہوتا تو وہ اب تک پچاس لوگوں کو جیل میں ڈال چکے ہوتے۔

عمران خان کے بیان سے ثابت ہوتا ہے کہ نیب ان کے ماتحت نہیں ہے۔

ہم نے کبھی یہ نہیں کہا کہ پوری مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کرپٹ ہے۔

عمران خان جب کہتے ہیں کہ کرپٹ لوگوں کو جیل میں ڈالیں گے تو اپوزیشن کی چیخیں کیوں نکلتی ہیں پکڑا تو صرف کرپٹ جائے گا۔

اپوزیشن کبھی اپنے دفاع میں کچھ نہیں بولتے صرف یہ کہتے ہیں کہ ان کو پکڑا ہے تو کسی اور کو بھی پکڑیں۔

پیپلز پارٹی کی سندھ اور مسلم لیگ ن کی پنجاب میں کئی بار حکومت رہی لیکن انہوں نے انٹرنل اکاؤنٹیبلیٹی کا کوئی نظام نہیں بنایا۔

ہم نے کے پی کے میں احتساب کا نظام ٹھیک طرح سے نہیں چلایا یہ ہماری غلطی تھی۔

پی ٹی آئی کی حکومت میں سب سے اچھا کام یہ ہوا ہے کہ وزیراعظم اور وزرا کی حد تک کرپشن ختم ہو گئی ہے۔

آج تک اسلام آباد جیسے شہر میں مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کی حکومتوں نے ایک اچھا ہسپتال نہیں بنایا۔

اکانومی ٹھیک ہونے میں وقت لگتا ہے ایسا نہیں ہو سکتا کہ بٹن دبایں اور سب کچھ ٹھیک ہو جائے۔

پیپلز پارٹی کے مرتضی وہاب نے کہا کہ

اس وقت آئین اپنی اصلی شکل میں نافز ہے اس لئیے حکومت کوئی این آر او نہیں دے سکتی۔

ہم پر جو الزامات لگائے جاتے ہیں وہ ترائیل کورٹ میں ثابت نہیں ہوتے۔

ڈاکٹر عاصم پر چار سو باسٹھ ارب روپے کی کرپشن کا الزام لگایا گیا لیکن ثابت نہیں ہو سکا۔

امریکہ اور برطانیہ میں احتساب کا کوئی ادارہ نہیں ہے وہاں ہر منسٹری کا اپنا احتساب کا نظام ہے۔

http://nadeemmalik.wordpress.com/

16 January, 2019 05:20


image.png

https://www.youtube.com/watch?v=J2HaTZcwrvw

http://www.zemtv.com/2019/01/15/nadeem-malik-live-15th-january-2019/

http://siasatkorner.com/threads/nadeem-malik-live-%E2%80%93-15th-january-2019.410506/

NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

15-01-2019

TOPIC- PAKISTAN POLITICS

GUESTS- NADEEM AFZAL CHAN, KHURRUM DASTGIR KHAN, IMTIAZ SHEIKH

NADEEM AFZAL CHAN OF PTI said that the accountability and doing the government are two different things. He said that if the purpose of the opposition coalition is to strengthen the institutions the government will support them. He said that the government has made it clear that no NRO will be offered and everyone knows how NRO is gotten. He said that Imran Khan has advised his ministers that no one should use indecorous language against the family of any politician. He said that PTI has no intention to sack Sindh government but they are self destructive then what can we do about it.

He said that the people that were blaming to the establishment are now praising them. He said that PPPP and PML-N will vote in the favor of military courts they have decided to take the U-turn on it. He said that PML-N was running the economy on ad hocism PTI is trying to make it self dependent. He said that PML-N pledged the motorway and tried to pledge PTV but could not to run the country. He said that PML-N destroyed the FBR. He said that his question is to PML-N to mention just one institution they left in ideal situation.

He said that if the opposition wants to bring the reforms in the accountability law they should the federal government will support them.

KHURRUM DASTGIR KHAN OF PML-N said that the political parties should not go into the enmity but they can keep their differences. He said that PPPP was also granted NRO by giving them Sindh government. He said that the PTI government is attacking Sindh government over and over again. He said that the opposition will not bring the resolution of no confidence against the government but will consider it after the mini budget.

He said that the bill of military courts was passed during the government of PML-N.

He said that the oil prices have been so low at the moment but the government is unable to handle the economy.

IMTIAZ SHEIKH OF PPPP said that no one has asked for NRO and neither the PM is in the position to offer it. He said that the SC has not accepted the report of JIT.

He said that PPPP has supported the military courts although Raza Rabbani opposed it. He said that PPPP will respond on the military courts when Imran Khan will contact party leadership on the issue.

He said that the government will need the help of the institutions to get the military bill passed from the parliament.

He said that the government has done only one good thing they have brought the opposition together.

http://nadeemmalik.wordpress.com/

15 January, 2019 16:01


NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

15-01-2019

احتساب اور حکومت کرنا دو علیحدہ علحیدہ چیزیں ہیں۔ ندیم افضل چن کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

اگر اپوزیشن کا ایجنڈا اداروں کی بہتری کے لئیے ہے تو ہم ان کا ساتھ دیں گے۔

وزیراعظم نے صاف کہہ دیا ہے کہ کوئی این آر او نہیں ملے گا یہ سب کو پتہ ہے کہ یہ کیسے ملتا ہے۔

عمران خان نے کل کہا ہے کہ کوئی وزیر کسی سیاست دان کی فیملی کے متعلق کوئی نا زیبا بات نہ کرے۔

ہم سندھ حکومت کو گرانے کا کوئی ارداہ نہیں رکھتے لیکن اگر کوئی خود جانا چاہے تو ہم کیا کر سکتے ہیں۔

کل تک فوج کو خلائی مخلوق کہنے والے آج پارلیمنٹ میں آرمی چیف کی تعریف کر رہے تھے۔

اپوزیشن چاہے تو ہمارے خلاف عدم اعتماد کی تحریک لے آئے یہ جمہوری عمل ہے۔

جب ملٹری کورٹس کا معاملہ آئے گا تو پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن اس کی حمایت کریں گے یہ یو ٹرن لے چکے ہیں۔

مسلم لیگ ن ایڈہاک ازم پر معیشت چلائی ہم اسے پاؤں پر کھڑا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

مسلم لیگ نے موٹر وے گروی رکھ دی ٹی وی سٹیشن کو گروی رکھنے کی کوشش کی ایف بی آر تباہ کر دی۔

مسلم لیگ ن ایک ادارہ بتا دے جو آئیڈیل صورت حال میں چھوڑ کر گئے ہوں۔

اپوزیشن احتساب کے قانون پر جو اصلاحات لانا چاہتی ہے لائے ہم ساتھ دیں گے۔

مسلم لیگ ن کے خرم دستگیر نے کہا کہ

سب سے پہلے خود عمران خان نے این آر او لیا تھا۔

سیاسی جماعتوں کو ایک دوسرے کے ساتھ دشمنی میں نہیں جانا چاہئیے اختلاف بے شک رکھیں۔

پیپلز پارٹی کو بھی سندھ حکومت دے کر این آر او دیا گیا۔

پی ٹی آئی کی حکومت بار بار سندھ حکومت پر حملہ کرتی ہے۔

ہم حکومت کے خلاف تحریک عدم اعتماد نہیں لایں گے منی بجٹ کے بعد اس پر غور کریں گے۔

مسسلم لیگ ن آج بھی ووٹ کو عزت دو کے نعرے پر کھڑی ہے۔

پہلے بھی ملٹری کورٹس کا بل مسلم لیگ ن نے پاس کیا تھا۔

آج تیل کی قیمت بہت کم ہے لیکن حکومت معیشت کو سمبھال نہیں پا رہی۔

پیپلز پارٹی کے امتیاز شیخ نے کہا کہ

نہ کسی نے این آر او مانگا ہے اور نہ وزیراعظم این آر او دینے کی پوزیشن میں ہیں۔

جے آئی ٹی کی رپورٹ کو سپریم کورٹ نے نہیں مانا۔

پہلے بھی زرداری گیارہ سال قید کاٹ چکے ہیں۔

ہم نے ملٹری کورٹس کی حمایت کی تھی حالانکہ رضا ربانی اس کے خلاف تھے۔

ملٹری کورٹس پر عمران خان ہماری قیادت سے رابطہ کرے تو ہم جواب دیں گے۔

حکومت کو پارلیمنٹ سے ملٹری بل پاس کروانے کے لئیے اداروں کی مدد کی ضرورت پڑے گی۔

حکومت نے صرف ایک کام کیا ہے کہ اپوزیشن کو ایک دوسرے کے قریب کر دیا ہے۔

http://nadeemmalik.wordpress.com/

14 January, 2019 16:02


NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

14-01-2019

ہم پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن کے ساتھ کوئی بیک ڈور ڈپلومیسی نہیں کر رہے۔ ملائیکہ بخاری کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

انصاف وہ فیصلہ ہوتا ہے جو قانون کے مطابق ہو نہ کہ وہ کسی کے حق میں آئے۔

پاناما کیس میں نواز شریف کے وکیل نے عدالت کے سامنے تسلیم کیا تھا کہ ان کا اقامہ تھا جو انہوں نے ظاہر نہیں کیا تھا۔

مسلم لیگ ن کی حکومت اکانومی کو آئی سی یو میں چھوڑ کر گئی۔

یہ بھی ممکن ہے پی ٹی آئی کی حکومت آئی ایم ایف کے پاس نہیں جائے گی۔

زرداری پارلیمنٹ میں کھڑے ہو کر کہہ رہے تھے کہ پاکستان ایک فیل سٹیٹ کی طرف جا رہا ہے۔

اپوزیشن پارلیمنٹ میں بہت سخت اپوزیشن کر رہی ہے اسے چلنے نہیں دے رہی لیکن ہم اسے چلایں گے۔

اپوزیشن نے اب تک پارلیمنٹری کمیٹیاں نہیں بننے دیں۔

علیمہ خان اور نواز شریف کے کیس میں زمین آسمان کا فرق ہے نواز شریف ملک کے سب سے بڑے عہدے پر فائز رہے۔

علیمہ خان کبھی پبلک آفس ہولڈر نہیں رہیں انہوں نے کبھی منی لانڈرنگ نہیں کی۔

پیپلز پارٹی کے نوید قمر نے کہا کہ

حکومت پچھلے پانچ ماہ سے جس طرح حکومت چلا رہی اس طرح لک آگے نہیں جا سکتا۔

اس وقت کافی افواہیں ہیں کہ کون رہے گا اور کون نہیں رہے گا۔

سیاسی جماعتیں ایسے کسی ججمنٹ کے نتیجے میں ختم نہیں ہو جاتیں۔

نواز شریف کو نا اہل قرار دینے کا فیصلہ غلط تھا۔

بیک چینلز ہمیشہ ہوتے ہیں اور ہونے بھی چاہئییں اور ایسا ہی ہوا ہے۔

منی بجٹ میں پھر سے ٹیکسز بڑھا رہے ہیں اس کے علاوہ اور کوئی راستہ نہیں ہے۔

حکومت کو بولڈ فیصلے کرنے چاہئییں تنقید ہو گی۔

علیمہ خان کے خلاف اس لئیے کیس چلایا جا رہا ہے کیونکہ وہ عمران خان کی بہن ہیں۔

مسلم لیگ ن کے محسن نواز رانجھا نے کہا کہ

ججوں نے قانون کے مطابق نواز شریف اور مریم نواز کے حق میں فیصلہ دیا ہے۔

حکومت کو یہ غلط فہمی اپنے زہن سے نکال دینی چاہئیے کہ عدالت ان کے ساتھ کوئی رعایت کرے گی۔

پی ٹی آئی کو موقع ملا لیکن وہ اس سے فائدہ نہیں اٹھا سکی۔

میں کہہ سکتا ہوں کہ ڈالر کی قیمت ایک سو چوراسی تک جائے گی۔

احتساب پااکستان کے لوگوں کا مسئلہ نہیں ہے۔

حکومت کی بھول ہے کہ وہ اگلا الیکشن احتساب کی بنیاد پر جیت لے گی۔

علیمہ خان کو نواز شریف کی طرح جواب دینا پڑے گا انہوں نے زرائع سے زیادہ جائیداد بنائی ہے۔

علیمہ خان کو اپنی ساری دولت کا حساب دے دینا چاہئیے تا کہ عمران خان کے رفاعی ادارے پر کوئی الزام نہیں لگائے۔

http://nadeemmalik.wordpress.com/