18 May, 2016 06:17


NADEEM MALIK LIVE

http://videos.samaa.tv/NadeemMalik/

17-MAY-2016

ہمارا موقف تھا کی عمران خان بھی وزیراعظم کے خطاب والے دن ایوان سے خطاب کریں لیکن باقی اپوزیشن نے کہا کہ نہیں ہمیں صرف نواز شریف کا نقطہ نظر سننا چاہئیے۔ شاہ محمود قریشی کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

اپوزیشن نے کہا کہ اگر وزیراعظم ہمارے سوالات کے جواب دیں تو ٹھیک ورنہ ہم بائیکاٹ کریں گے اور ان کی تقریر کا تجزیہ کر کے دوسرے دن جواب دیں گے۔ شاہ محمود قریشی

کل عمران خان خود پارلیمنٹ میں جایں گے دستاویزات لے کر جایں گے اور اپنی پراپرٹی کا حساب دیں گے۔ شاہ محمود قریشی

نواز شریف کے خلاف الزامات کا سلسلہ پہلی دفعہ نہیں ہوا اس سےپہلے بھی ہوتا رہا ہے لیکن کچھ بھی ثابت نہیں ہو سکا تھا۔ انوشہ رحمان

پارلیمنٹ نہ تو سپریم کورٹ کا جج ہے اور نہ کمشن ہے پاناما پیپرز کا معاملہ کمشن میں پیش ہو گا۔ انوشہ رحمان

حکومت نے ٹی آرز بنائے انیس سو چھپن کے قانون کے تحت جیوڈیشل کمشن بنایا سپریم کورٹ نے انہیں مسترد کر دیا۔ شاہ محمود قریشی

خواجہ آصف اور پرویز رشید اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ کے پاس آئے اور کہا کہ حکومت کی کمیٹی ان کے ساتھ مل کر ٹی او آرز بنائے گی لیکن وہ اب تک نہیں آئے۔ شاہ محمود قریشی

ہمیں پارلیمنٹ میں آنے کا درس دینے والے آج پارلیمنٹ کو لیگل فورم نہیں سمجھتے۔ شاہ محمود قریشی

شریف خاندان کو سمجھنا چاہئیے کہ وہ چاہیں بھی تو پاناما پیپرز کے الزامات سے نہیں بچ سکتے بہت ثبوت موجود ہیں۔ سعید غنی

نواز شریف اگر استعفی دیں گے تو دوسرا وزیراعظم پی ٹی آئی یا پیپلز پارٹی سے نہیں آئے گا مسلم لیگ ن سے ہی ہو گا۔ سعید غنی

میں اسحق ڈار صاحب کو دعوت دیتا ہوں کہ وہ کل ہمارے ساتھ بیٹھ کر ٹی او آرز طے کر لیں۔ شاہ محمود قریشی

وزیراعظم نے پارلیمنٹ میں واضع طور پر کہا ہے کہ پاناما پیپرز کا دو ٹوک انداز میں فیصلہ ہو جانا چاہئیے۔ انوشہ رحمان

جیسے ہی نواز شریف کو پتہ چلا کہ ان کی لندن کی پراپرٹی کا علم ہو چکا ہے تو انہوں نے اپنے بیٹے کے ٹی وی انٹرویو کروا دئیے۔ سعید غنی

حکومت کی پوری کوشش ہے کہ پاناما پیپرز کا معاملہ لٹکایا جائے اور معاملات کو الجھایا جائے۔ سعید غنی

جب بھی حکومت کی کرپشن کی بات کی جاتی ہے تو کبھی کہا جاتا ہے کہ ملک کی ترقی کا عمل رک گیا ہے اور کبھی جمہوریت کو خطرہ بتایا جاتا ہے۔ شاہ محمود قریشی

اپوزیشن نے کہا ہے کہ اگر نواز شریف کویقین ہے کہ وہ بیگناہ ہیں تو سٹیپ ڈاؤن کر جایں بیگناہ ثابت ہو جایں تو واپس آ جایں۔ شاہ محمود قریشی

پاناما پیپرز کے انکشافات میں صحافیوں نے اپنی بہت سی باتیں شامل کر لی ہوئی ہیں۔ انوشہ رحمان